Sunday, April 21, 2019
News Code : 357352 | Publish Date :2019/4/15 - 10:08 | Category: Urdu News
سربراہ مجلس وحدت مسلمین پاکستان:
سانحہ ہزار گنجی سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے
حوزه/حجت الاسلام والمسلمین راجہ ناصرعباس جعفری نے سانحہ ہزار گنجی کوئٹہ پر میڈیا سیل سے جاری بیان میں کہا کہ سانحہ ہزار گنجی سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے۔دہشتگردوں کے سہولت کاروں کو قومی دھارے میں لانے کی پالیسی پر تحفظات ہیں۔کو ئٹہ عوام کے لئے نوگو ایریا اور دہشت گروں کے لئے فری زون بن گیا ہے۔

 حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق سربراہ مجلس وحدت مسلمین حجت الاسلام والمسلمین راجہ ناصرعباس جعفری نے سانحہ ہزار گنجی کوئٹہ پر میڈیا سیل سے جاری بیان میں کہا کہ سانحہ ہزار گنجی سیکورٹی اداروں کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے۔دہشتگردوں کے سہولت کاروں کو قومی دھارے میں لانے کی پالیسی پر تحفظات ہیں۔کو ئٹہ عوام کے لئے نوگو ایریا اور دہشت گروں کے لئے فری زون بن گیا ہے۔۔دھماکے میں قیمتی جانوں کا ضیاع افسوس ناک ہے سانحہ ہزار گنجی کی شدیدالفاظ میں مذمت کر تے ہیں.

 انہوں نے کہا کہ دہشت گردوں کی آزادانہ کاروائیوں میں تیزی تشویش ناک ہے کوئٹہ انتظامیہ سے ایک سریاب روڈ پر کی سیکورٹی سنبھا لی نہیں جار ہی سریاب روڈ پر دہشت گردوں کی رٹ قائم ہے۔ صوبائی حکومت روائتی مذمتی بیانات دے کر واقعات سے چشم پوشی اختیار کئے ہوئے ہیں۔ملک بھر کے حساس اور بدامنی کا شکار علاقوں میں دہشت گردوں اور ان کے سہولت کاروں کے خلاف کراچی کی طرح بے رحمانہ عسکری آپریشنز کرکے ان درندوں کو شان عبرت بناکر عوام کی جان مال کی تحفظ کو یقینی بنایا جائے۔

ملک دشمن دہشتگرد کسی قسم کی رعایت کے مستحق نہیں ہیں جو لوگ بیرونی ایجنڈے پر وطن عزیز کی بے گناہ عوام سیکورٹی فورسز اور املاک کو نقصان پہنچاتے رہے ہیں۔وہ کسی بھی بیانیہ کو نہیں مانتے۔ دہشتگردوں کے سہولت کاروں کو قومی دھارے میں لانے کی پالیسی پر تحفظات ہیں ایسا کرنا ان کو آکسیجن فراہم کرنے کے مترادف اور ہزاروں شہدا کے لہوکو ضائع کرنا اور لواحقین کے زخموں پر نمک پاشی کے مترادف ہے۔سانحہ ہزار گنجی کے بے گناہ اور غریب پاکستانی شہیدوںکے لواحقین سے اظہار تعزیت کرتے ہیں۔

حکومت شہدا کے لواحقین کو کے لئے فوری معاوضے کا اعلان کرئے اور واقعے کے ذمہ داروں کو انصاف کے کٹہرے میں لانے کے لئے سنجیدہ اقدامات کرئے ۔

 

  •  

 

Send Comment
Name :
Email:
Comment:
Send
View Comments