Monday, March 25, 2019
News Code : 356052 | Publish Date :2019/3/12 - 10:18 | Category: Urdu News
​مزار شریف میں مسجد بلال کے امام جمعہ:
امریکہ کے ساتھ سیکورٹی معاہدے کو منسوخ ہونا چاہئے/ اسلامی ممالک کیوں مسلمانوں کے قتل عام پر خاموش ہیں ؟
حوزہ/ حجت الاسلام و المسلمین سید سجاد عالمی نے کہا: امریکہ کے ساتھ جو سیکورٹی معاہدہ منسوخ ہوا ہے اس کا نہ صرف یہ کہ کوئی فائدہ نہیں تھا بلکہ یہ معاہدہ ملک میں ناامنی میں اضافہ کا سبب بھی بنا اور ملک کی مشکلات میں اضافے کا بھی باعث تھا۔

حوزہ نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق مزار شریف کے علاقے سجادیہ میں موجود مسجد بلال کے  امام جمعہ حجت الاسلام و المسلمین سید سجاد عالمی نے اس علاقے کے شیعوں کے درمیان اپنی تقریر میں امریکہ کے ساتھ بند ہوئے سیکورٹی معاہدے  کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ سیکورٹی معاہدہ نہ صرف یہ کہ اس کا کوئی فائدہ نہیں تھا بلکہ یہ معاہدہ ملک میں ناامنی میں اضافہ کا سبب بھی بنا اور ملک کی مشکلات میں اضافے کا بھی باعث تھا۔

حجت الاسلام و المسلمین سید سجاد عالمی نے کہا: قرآن کریم نے دنیا کو متحرک اور قابل رشد چیز  کے طور پر معرفی کیا ہے پس اب اگر ایک انسان ساکن اور بے حرکت رہے گا تو گویا اس نے فطرت کے خلاف عمل کیا ہے جو کہ یقینا اس کے نقصان کا باعث ہو گا۔

حجت الاسلام عالمی نے کہا: آج  مکتب امام حسین و اهل بیت(ع) کے دشمن نے اپنی جنگ میں مختلف  حربوں کو استعمال کرتے ہوئے اسے ایک ثقافتی جنگ میں تبدیل کر دیا ہے اور وہ اس ثقافتی جنگ میں کسی بھی قسم کے حیلے و مکر و فریب کو استعمال کرنے میں دریغ نہیں کر رہا ہے۔

مسجد بلال کے  امام جمعہ نے اپنے خطاب میں میانمار کے مظلوم مسلمانوں کی مشکلات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا:   ایک مدت  ہوئی ہے کہ اقوام متحدہ (بھلے تظاہر ہی سہی) مسلمانوں کے قتل عام کی وجہ سے میانمار کی حکومت کی مذمت کر رہی ہے اور حکومت میانمار کے اس ظالمانہ کام کو انسانی حقوق کی کھلم کھلا خلاف ورزی قرار دے رہی ہے  لیکن اس طرف  اسلامی اور عربی حکومتوں کی طرف سے اس ظلم عظیم کے خلاف کوئی اقدام ہوتا نظر نہیں آتا ہے۔

Send Comment
Name :
Email:
Comment:
Send
View Comments