Monday, October 22, 2018
News Code : 353449 | Publish Date :2018/10/3 - 08:06 | Category: Urdu News
آیت اللہ علوی گرگانی:
چہلم امام حسین(ع) کو پہلے سے زیادہ زندہ رکھنے کی ضرورت ہے
حوزہ / چہلم سید الشہداء(ع) ایک ثقافت ہے جس کو زندہ رکھنے کی ضرورت ہے تاکہ اسلام کو نئی زندگی ملے۔

حوزہ نیوز ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق آیت اللہ علوی گرگانی نے زائرین چہلم سید الشہداء(ع) کی رہائش کیلئے شہر قم میں لگائے جانے والے کیمپس کے اراکین سے ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہا: خداوندعالم نے امام حسین(ع) کا لقب "ثاراللہ" قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا: اس جملے کا معنی یہ ہے کہ امام حسین(ع) نے اپنا سب کچھ خدا کی راہ میں قربان کردیا۔خداوند متعال بھی امام حسین(ع) کے اس قیام کے عوض جس چیز کی امام حسین(ع)  خواہش کریں گے وہ انجام دیں گے۔

آیت اللہ علوی گرگانی نے کہا: مرحوم بحرالعلوم سے بھی اس جملے کا معنی پوچھا گیا تو انہوں نے بھی یہی جواب دیا کہ امام(ع) نے سب کچھ قربان کردیا۔ خداوند عالم بھی امام حسین(ع) کے اس عمل کی قدردانی کرتے ہوئے امام(ع) کو ایسی چیز عطا کرنی چاہئے جو اس عمل کی برابری کر سکے۔

اس مرجع تقلید نے کہا: بچے اور خواتین چہلم سید الشہداء(ع) کے موقع پر پاپیادہ کربلا پہنچتے ہیں جس سے ظاہر ہوتا کہ خدا نے اہل بیت(ع) اور امام حسین(ع) سے عشق کی حرارت مومنین اور محبان اہل بیت(ع) کے دلوں میں ڈال دی ہے۔

آیت اللہ علوی گرگانی نے کہا: چہلم امام حسین(ع) ایک کلچرل ہے جسے زندہ رہنا چاہئے تاکہ اسلام کو حیات نو ملے۔

انہوں نے کہا: گذشتہ سالوں میں چہلم سید الشہداء(ع) کے زائرین کو شہر قم میں مصلی قدس میں ٹھہرایا جاتا رہا ہے لیکن اس سال حرم حضرت فاطمہ معصومہ(س) کے تعاون سے زائرین کیلئے کیمپس لگائے ہیں۔ یہاں 12 ممالک کے زائرین آرہے ہیں جن میں سے اکثریت پاکستانی زائرین کی ہے۔

Send Comment
Name :
Email:
Comment:
Send
View Comments